حکومت گلگت کیطرح بلتستان پولیس میں بھی غیرقانونی بھرتیاں چاہتی ہیں، آغا علی رضوی

حکومت گلگت کیطرح بلتستان پولیس میں بھی غیرقانونی بھرتیاں چاہتی ہیں

وحدت نیوز(سکردو) مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے صوبائی سیکرٹری جنرل آغا علی رضوی نے پولیس بھرتیوں کے مہینوں بعد بھی آرڈرز جاری نہ کرنے پر حکومت اور محکمہ پولیس کے ذمہ داران کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے متنبہ کیا کہ ایک علاقے میں اقربا پروری کی شکایات پر پورے خطے کی بھرتیوں کو روکنا عوام کیساتھ زیادتی ہے۔ حکومت چاہتی ہے کہ گلگت کیساتھ بلتستان اور دیگر علاقوں میں بھی اپنی من مانی کے تحت بھرتیاں کریں، جسے ہم کسی صورت قبول نہیں کرینگے۔ آغا علی رضوی نے مزید کہا کہ چونکہ بلتستان ریجن میں کہیں بھی کسی بھی فریق کو پولیس بھرتیوں پر کوئی شکایت نہیں اسلئے حکومت کے لئے ضروری ہے کہ فی الفور تعیناتی کے آرڈر جاری کراکر خطے کی سکیورٹی ضروریات کو پوری کرنے کیلئے پولیس کی نفری بڑھائیں۔ حکومت پہلے ہی کئی مہینے ضائع کرچکے اب مزید تاخیری حربے اختیار کریں تو ہم بھرپور عوامی ردعمل پر مجبور ہونگے۔ آئی جی پی اور دیگر ذمہ داران اپنی ذمہ داریوں کو پوری کرتے ہوئے عوامی آواز اور محکمے کی ضروریات کو پوری کرنے کیلئے فوری اقدام کریں۔